33 سالہ لڑکی نے اس مرد سے شادی کرنے کا فیصلہ کرلیا جس سے ملنے کا موقع شاید زندگی بھر نہ مل پائے

33 سالہ لڑکی نے اس مرد سے شادی کرنے کا فیصلہ کرلیا جس سے ملنے کا موقع شاید زندگی بھر نہ مل پائے
برطانیہ سے تعلق رکھنے والی ایک خاتون نے انٹرنیٹ پر ایک امریکی شہری سے دوستی کے بعد اس سے شادی کا فیصلہ کر لیا ہے، لیکن حیرت کی بات یہ ہے کہ یہ شخص ایک خطرناک مجرم ہے اور دوہرے قتل کے جرم میں عمر قید کی سزا کاٹ رہا ہے۔

میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق جسٹن ارسکین نامی اس شخص نے دو لوگوں کو قتل کر دیا تھا جس پر اسے 2006ءمیں عمر قید کی سزا سنائی گئی تھی اور اب یہ انتہائی سکیورٹی والی جیل میں قید ہے۔ ایما پیکیٹ نامی 33سالہ برطانوی خاتون کی اس سے ملاقات جیل کی ’پین پال‘ ویب سائٹ پر ہوئی اور دونوں کو ایک دوسرے سے محبت ہو گئی۔

رپورٹ کے مطابق جسٹن منشیات کے دھندے میں ملوث تھا اور منشیات پر ہی اس کا دو لوگوں سے جھگڑا ہوا جنہیں اس نے گولیاں مار کر قتل کر دیا اور ایک گڑھا کھود کر اس نے لاشیں اس میں دفن کر دی تھیں۔اب جسٹن اور ایما جلد شادی کرنے والے ہیں۔ایما برطانوی شہر سٹوربرج کی رہائشی اور 3 بچوں کی ماں ہے جن کی عمریں بالترتیب 14،12اور 6سال ہیں۔

دونوں کی ویب سائٹ پر 5ماہ سے خط و کتاب ہو رہی ہے اور ایما دو بار امریکہ جا کر جیل میں اس سے ملاقات بھی کر چکی ہے۔ تاہم وہ دونوں شادی کے بعد کبھی جیل کے باہرنہیں مل سکیں کیونکہ عدالتی فیصلے کے مطابق جسٹن کو پیرول پر بھی رہائی نہیں مل سکتی، بلکہ جیل میں ملاقات کے دوران بھی وہ دور سے ہی ایک دوسرے کو دیکھ سکیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں