خاتون نے بھیس بدل کر گھوڑوں کے ساتھ سرعام ایسا کام شروع کردیا کہ افراتفری پھیل گئی، پولیس کو گرفتار کرنا پڑگیا کیونکہ۔۔۔

امریکی شہر چارلسٹن سے تعلق رکھنے والی ایک خاتون کے دماغ میں نجانے کیسے یہ انوکھی شرارت آئی کہ اس نے ڈائنو سار کاسٹیوم پہنا اور سڑک پر چلتے گھوڑوں کو ڈرا دیا جس کے نتیجے میں ایسی افراتفری مچی کہ دو کوچوان بری طرح زخمی ہو گئے۔ بگھی میں جتے گھوڑوں نے جب اچانک ایک عجیب و غریب چیز کو اپنے سامنے دیکھا تو بری طرح بدک گئے اور سرپٹ دوڑنے لگے۔

انہیں قابو کرنے کی کوشش میں دو کوچوان شدید زخمی ہو گئے جبکہ بگھیوں میں سوار افراد بھی بال بال بچے۔ مقامی پولیس کا کہنا ہے کہ نکول ویلز نامی خاتون چرچ سٹریٹ پر گھوڑوں کے سامنے آئی، جو دو بگھیوں کو کھینچ رہے تھے جن میں ڈیڑھ درجن کے قریب سیاح سوار تھے۔ جب گھوڑے خوفزدہ ہوکر بدکے تو انہیں قابو کرنے کی کوشش میں کوچوان نیچے گر گئے اور ایک کوچوان کے پیر کے اوپر سے بگھی کا پہیہ گزرگیا جس کے باعث اس کے پیر کی ہڈیاں ٹوٹ گئیں۔ بگھیوں میں سوار سیاح اس واقعے میں محفوظ رہے۔

متعدد عینی شاہدین نے پولیس کو بتایاکہ انہوں نے ڈائنوسار کاسٹیوم میں ملبوس خاتون کو گھوڑوں کے سامنے آتے دیکھا جس کے بعد گھوڑے بری طرح بدک گئے۔ دوسری جانب کچھ عینی شاہدین کا یہ بھی کہا تھا کہ خاتون کے طرز عمل سے لگتا تھا کہ غیر ارادی طور پر اس کا گھوڑوں سے آمنا سامنا ہوگیا تھا۔ پولیس نے نکول کو گرفتار کیا تھا لیکن تحقیقات کے بعد اسے بے قصور قرار دے کر رہا کردیا گیا ہے۔ بگھیوں کی مالک کمپنی ’پالمیتو کیرج ورکس‘ اس کی رہائی پر خوش نہیں ہے اور ان کا کہنا ہے کہ وہ اس معاملے کو عدالت میں لے کر جائیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں