آدمی کی تین نوعمر بہنوں سے جنسی زیادتی، تینوں حاملہ ہوگئیں اور پھر۔۔۔ ایسا واقعہ کہ ہر انسان کانوں کو ہاتھ لگانے پر مجبور ہوجائے

جنسی جرائم کہاں نہیں ہوتے، لیکن امریکی ریاست اوہائیو میں تو ایک جنسی درندے نے ایسی وحشت کا مظاہرہ کر ڈالا ہے کہ جس کی مثال انسانی تاریخ نے شاید ہی کبھی دیکھی ہو گی۔ اس درندے نے تین کمسن سگی بہنوں کو حیوانیت کا نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں تینوں حاملہ ہوگئیں۔ دی میٹرو کے مطابق 27 سالہ بدبخت نوجوان کا نام آرنلڈ پیری ہے،

جس نے 14 سال عمر کی دو جڑواں بہنوں اور ان کی چھوٹی بہن جس کی عمر 12 سال ہے، سے جنسی زیادتی کی جس کے نتیجے میں تینوں بہنیں حاملہ ہوچکی ہیں۔ آرنلڈ ایک آوارہ مزاج بے گھر شخص تھا اور متاثرہ لڑکیوں کی ماں نے اس پر ترس کھا کر اسے اپنے گھر میں رہنے کی اجازت دی تھی، لیکن اسے معلوم نہیں تھا کہ یہ درندہ اس کی کمسن بیٹیوں کی زندگی برباد کر ڈالے گا۔

جڑواں بہنوں میں سے ایک کا اسقاط حمل ہو چکا ہے لیکن باقی دو بہنوں کے حمل کی مدت اتنی ہوچکی تھی کہ اسقاط حمل ممکن نہیں تھا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ آرنلڈ کے بارے میں کی گئی تحقیقات کے دوران یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ وہ اس سے پہلے بھی کمسن لڑکیوں کو زیادتی کا نشانہ بناچکا ہے لیکن ان متاثرہ لڑکیوں کے بارے میں مکمل تفصیلات تاحال سامنے نہیں آئی ہیں۔ عدالت نے اس شیطان صفت مجرم کے مقدمے کی سماعت کے بعد اسے 27 سال قید کی سزا سنا کر جیل بھیج دیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں